مادری زُبان میں کثیرالسانی نظام تعلیم

مادری زُبان میں کثیرالسانی نظام تعلیم آئی پی این کے مشن کا ایک بنیادی حصہ ہے۔ اس حوالے سے آئی پی این نے کوہستانی زُبان کے فروغ، ترقی ، حفاظت اور بچوں کو اپنے ہی زبان میں تعلیم دِلوانے کے لئے ایک سکول کھولا ہے جس کا قیام مارچ 2014 میں ہواہے۔ آج کل پوری دنیاء مادری زُبان میں نظام تعلیم کے حامی ہے اور اس حوالے سے بین الاقوامی طور پہ ہر کمیونٹی اپنے ہی زُبان میں نظام کو فروغ دے رہی ہے۔ آئی پی این مادری زُبان میں نظام تعلیم کا حامی ہے اور ہر بچے کو اپنے ہی مادری زُبان میں تعلیم حاصل کرنے کا بنیادی حق ہے۔ اس حوالے ہر ملک کے آئین کو اُٹھا کر دیکھا جائے تو لکھا ہوا ہے کہ ہر بچے کو اپنے ہی زُبان میں تعلیم حاصل کرنے پورا حق ہے۔ اُسی سوچ کو آگے لیتے ہوئے آئی پی این نے سکول کا آغاز کیا ہے جس میں ذیادہ تر مادری زُبان میں تعلیم دی جاتی ہے۔ ایسے بچے جو اپنی مادری زُبان میں تعلیم حاصل کرتے ہیں وہ دوسرے بچوں کی نسبت بہت ذیادہ قابل پائیں ہیں اور یہ پوری دنیاء سے ثابت شدہ بات ہے اور اسی بات کو ہم نے بھی یہاں اپنے ہی سکول میں پایا ہے۔ ہمارے بچے ہمارے دوسرے پرائیویٹ سکولوں کے بچوں سے بہت ذیادہ قابل ہیں اور وہ جو پڑھتے ہیں سمجھ کر پڑھتے ہیں اور اُن میں تخلیق کرنے کی بھی صلاحیت ہیں۔ رٹہ سسٹم اِن بچوں میں نہیں ہیں۔ المختصر مادری زُبان میں تعلیم حاصل کرنا بچے کے لئے، والدین کے لئے، معاشرے کے لئے اور پوری دنیاء کے لئے بہیت ہی ذیادہ فائدہ مند دیکھا گیا ہے۔